پاکستان کو شراکت داری کے فوائد حاصل ہو رہے ہیں: ایلس ویلز

واشنگٹن: نائب وزیر خارجہ برائے جنوبی ایشیا ایلس ویلز نے کہا ہے کہ پاکستان کو امریکا کے ساتھ شراکت داری کے فوائد حاصل ہو رہے ہیں۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق ایلس ویلز نے ایک ٹویٹ کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکا بیماریوں سے پاک مکئی اور گندم کی پیداوار اور تجارت میں پاکستان کی مدد کر رہا ہے، امریکا کے ساتھ شراکت داری سے پاکستان مستفید ہو رہا ہے۔

ٹویٹ میں ان کا کہنا تھا کہ امریکا چھوٹے پیمانے پر پاکستانی کاشت کاروں کے لیے مدد فراہم کر رہا ہے، امریکی شراکت داری سے پاکستان میں اب غذائی تحفظ میں بہتری آ رہی ہے۔

دو دن قبل پاکستان کے لیے امریکا کے ڈپٹی اسسٹنٹ سیکریٹری ارون میسنگا نے ساؤتھ ایشیا میگزین کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا تھا کہ امریکا پاکستانی اشیا کے لیے سب سے بڑا ایکسپورٹ مارکیٹ بن چکا ہے، امریکا اور پاکستان اس سلسلے میں گہری شراکت داری جاری رکھیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں عالمی اکانومی کا ایک اہم پلئیر بننے کی پوری صلاحیت ہے، اور ہم وزیر اعظم عمران خان کے اقتصادی اصلاحاتی ایجنڈے سے خاصے پرامید ہیں، پاکستان کے نوجوانوں پر سرمایہ کاری کے اقدام ڈیجیٹل پاکستان کو بھی ہم خوش آمدید کہتے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ امریکا پاکستانی اشیا کے لیے بڑی ایکسپورٹ مارکیٹ ہے، امریکی 2019 میں ایک بار پھر پاکستانی مصنوعات کے بڑے خریدار بنتے دکھائی دیے، پاکستان کے لیے امریکی ایکسپورٹس میں بھی اضافہ ہوا، چوں کہ اس سے دونوں ممالک میں ملازمتیں بنتی ہیں اس لیے ہم ان تجارتی تعلقات میں اضافہ چاہیں گے۔

آپ یہ بھی پسند کریں گے